Wednesday, September 14, 2011

بارش


بارش  بن کر 
بوندیں جب بھی 
اس دھرتی پر آتی ہیں 
دور نگر میں 
کسی غریب کی 
دنیا پھر لٹ جاتی ہے 

2 comments:

raisebaigal نے لکھا ہے کہ

Tera ghar aur mera jungle bheegta hai sath sath
Aisi barsaatain ke dil bheegta hai sath sath

Bachpane ka saath hai, phir aik se dunoo ke dukh
Raat ka aur mera aanchal bheegta hai sath sath

Woh ajab duniya ke sab khanjar bakf phirte hain aur
Kaanch ke peyaloo mein sandal bheegta hai sath sath

Baarishe sange malamat mein bhi woh hamraah hai
Mein bhi bheegoon khud bhi pagal bheegta hai sath sath

Larkeyoo ke dukh ajeeb hote hain sukh us se ajeeb
Hans rahee hain aur kaajal bheegta hai sath sath

ALI AHMAD JAN نے لکھا ہے کہ

great nur bhai.bst of all. keep it up:)

اگر ممکن ہے تو اپنا تبصرہ تحریر کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

Your comment is awaiting moderation.

اگر آپ کے کمپوٹر میں اردو کی بورڈ انسٹال نہیں ہے تو اردو میں تبصرہ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کرکے شائع کردیں۔